• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 36197

    عنوان: ہم بیڈ منٹن کھیلتے ہیں اور جو ٹیم ہارتی ہے وہ پیسے دیتی ہے اور سب مل کر کھانا کھاتے ہیں، وہ پیسے کسی کی ذاتی استعمال میں نہیں آتی اور نہ ہی کسی کے جیب میں جاتی ہے۔ براہ کرم، اس پر روشنی ڈالیں۔

    سوال: ہم بیڈ منٹن کھیلتے ہیں اور جو ٹیم ہارتی ہے وہ پیسے دیتی ہے اور سب مل کر کھانا کھاتے ہیں، وہ پیسے کسی کی ذاتی استعمال میں نہیں آتی اور نہ ہی کسی کے جیب میں جاتی ہے۔ براہ کرم، اس پر روشنی ڈالیں۔

    جواب نمبر: 36197

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(م): 227=227-2/1433 شرعاً یہ معاملہ ہی درست نہیں، یہ ایک قسم کا جوا ہے اور ہارنے والی ٹیم پر شرط کا پورا کرنا ضروری نہیں، جُوے سے حاصل شدہ رقم خبیث ہے، اس پیسے کو کھانے پینے میں خرچ کرنا درست نہیں، حل الجعل إن شرط المال من جانب واحد وحرم لو شرط فیہا من الجانبین لأنہ یصیر قمارا․ (شامي زکریا: ۹/۵۷۷)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند