• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 2012

    عنوان:

    کسی محکمہ میں جہاں بدعنوان اور رشوت خور لوگ ہوں وہاں ایمان داری سے ملازمت کرنے کی تنخواہ حلال ہے؟

    سوال:

    ہمارے ایک بھائی پولس محکمہ میں کام کرتے ہیں۔ وہ نہایت ایمان دار ہیں، لیکن ان کے محکمہ والے بہت بدعنوان اور رشوت خور ہیں۔ ہمارے بھائی بالکل رشوت نہیں لیتے، کیا ان کو نوکری کی جو تنخواہ ملتی ہے وہ جائز ہے؟مختصراً وضاحت فرمائیں۔

    جواب نمبر: 2012

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 589/ م= 584/ م

     

    رشوت حرام و ناجائز ہے، آپ کے بھائی رشوت لینے سے اجتناب کرتے ہیں، یہ قابل تعریف ہے، اگر آپ کے بھائی متعلقہ ڈیوٹی بوری دیانت وامانت داری سے انجام دیتے ہیں اور ان سے جو کام متعلق ہے اس میں کسی محظور شرعی کا ارتکاب نہیں کرنا پڑتا ہے تو ان کی نوکری جائز اور تنخواہ حلال ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند