• متفرقات >> حلال و حرام

    سوال نمبر: 179855

    عنوان: حرام پیسے سے گھر بنایا بعد میں توبہ كرلی اب اس گھر میں رہنے كے لیے كیا كرنا چاہیے؟

    سوال:

    ایک انسان نے حرام طریقہ سے پیسہ کمایا جس اس نے اپنا گھر بنایا لیکن پھر بعد میں اسے توبہ کرنے کی توفیق ملی تو اس نے توبہ کر لیا تو کیا پیسہ سے بناے ہوے گھر میں رھنا جائز ہے ؟

    جواب نمبر: 17985516-Sep-2020 : تاریخ اشاعت

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 37-23/M=01/1442

     حرام طریقے سے کس طرح پیسہ کمایا اس کوواضح کرکے سوال کرنا چاہئے تھا، بہرحال اب حکم یہ ہے کہ اگر مالک معلوم ہو اور واپسی ممکن ہو تو اسے اتنی رقم واپس کردیں اور اگر مالک کا پتہ نہیں یا واپسی متعذّر ہے تو ایسی صورت میں اتنی رقم غریبوں کو صدقہ کردیں اور توبہ استغفار بھی کریں اور اس پیسے سے بنائے ہوئے گھر میں رہ سکتے ہیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند