• عبادات >> حج وعمرہ

    سوال نمبر: 50038

    عنوان: میری عمر ۲۳/ سال ہے اور میں اپنے والد کے ساتھ عمرہ پر جانا چاہتاہوں

    سوال: میری عمر ۲۳/ سال ہے اور میں اپنے والد کے ساتھ عمرہ پر جانا چاہتاہوں پر میرے ساتھ کوئی محرم نہیں ۔ والدہ کا انتقال ہوچکا ہے۔ تو ٹور آپریٹر نے کہا وہ میرا ویزا ایک گروپ بناکر کسی فیملی کے ساتھ کردے گا۔ کیا ایسا کرنا جائز ہے؟

    جواب نمبر: 50038

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 337-290/H=3/1435-U آپ کو تو محرم کی ضرورت نہیں، محرم کی حاجت تو عورت کو ہوتی ہے، غالباً آپ کا اور ٹور آپریٹر کا منشا یہ ہوگا کہ کسی فیملی گروپ میں سے کسی اجنبیہ عورت کا فرضی اور جعلی طور پر آپ کو محرم بناکر سفر عمرہ پر بھیجا جائے گا اگر ایسا ہے تو یہ صورت جائز نہیں، ٹور آپریٹر سے صاف منع کردیں، کیونکہ ایسا کرنا قانونی طور پر بھی سخت جرم ہے، اور شرعاً بھی بڑا گناہ ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند