• عبادات >> حج وعمرہ

    سوال نمبر: 43901

    عنوان: حالت احرام میں پیمپر استعمال كرنا

    سوال: میرے کزن (رشتہ میں بھائی)کی عمر ۶۵ سال ہے اور عصا کے سہارے دھیرے دھیرے چلتے ہیں، وہ عمرہ کے لیے جانا چاہتے ہیں، بدقسمتی سے اسے غدود پیشاب کی شکایت ہے اور کبھی کبھارکچھ قطرے نکل جاتے ہیں جب کہ وہ اس کے لئے تیار نہیں ہوتے ہیں، اس لئے وہ پیمپر (پیشاب کو جذب کرنے والا پیپر ) استعمال کرتے ہیں ، اور اسے نماز پڑھنے کے وقت ہٹادیتے ہیں، عمرہ میں احرام میں صرف دو غیر سلے ہوئے کپڑے کی اجازت ہے، تو اس سلسلے میں ہمارے دوسوالات ہیں: (۱) کیا وہ حالت احرام میں پیمپر استعمال کرسکتے ہیں اور کیا احرام اس صورت درست ہوگا؟ (۲) یہاں وہ صرف نماز پڑھنے کے لیے وضو کرتے ہیں(کچھ منٹ کے لیے )، وہاں مکہ مکرمہ میں انہیں عمرہ اور طواف کے لیے زیادہ وقت کی ضرورت ہے اور پیشاب کے قطرے کی وجہ سے بار بار اس کا وضو ٹوٹ سکتاہے اور وہاں بیت الخلاء کی دور ی اور وقت کمی کی وجہ سے وضو ممکن نہیں ہے تو اس صورت حال میں وہ کیا کرسکتے ہیں؟براہ کرم، قرآن وحدیث کی روشنی میں رہنمائی فرمائیں۔

    جواب نمبر: 43901

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 359-314/D=3/1434 (۱) آپ کے کزن حالت احرام میں پیمپر (پیشاب کو جذب کرنے والا پیپر) استعمال کرسکتے ہیں اور احرام درست ہوجائے گا۔(زبدة: ۱۲۲) (۲) کوشش کریں کہ وضو باقی رہے، اور اگر طواف شروع کریں اور سات چکر مکمل کرلیں، وضو ٹوٹ جانے کی وجہ سے پہلے کیے جانے والے چکر ضائع نہیں ہوں گے، البتہ صفا اور مروہ کے درمیان سعی کے وقت وضو باقی نہ رہے تو کوئی حرج نہیں۔ (زبدة المناسک: ۱۲۳)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند