• عبادات >> حج وعمرہ

    سوال نمبر: 27960

    عنوان: میرا سوال مندرجہ ذیل ہے: (۱) میرا کیبل ٹی وی نیٹ ورک کا کاروبار جامعہ نگر، نیو دہلی میں ہے۔ کیا یہ کاروبار جائز ہے؟ (۲) کیبل ٹی وی کی آمدنی سے حج کر سکتے ہیں؟ (۳) اور کیبل ٹی وی کا کاروبار غلط ہے تو کیا جو مولانا اور مفتی ٹی وی پر پروگرام پیش کرتے ہیں وہ جائز ہے؟
     (۴) اگر کیبل ٹی وی کا کام غلط ہے تو اب ہم کیا کام کریں؟

    سوال: میرا سوال مندرجہ ذیل ہے: (۱) میرا کیبل ٹی وی نیٹ ورک کا کاروبار جامعہ نگر، نیو دہلی میں ہے۔ کیا یہ کاروبار جائز ہے؟ (۲) کیبل ٹی وی کی آمدنی سے حج کر سکتے ہیں؟ (۳) اور کیبل ٹی وی کا کاروبار غلط ہے تو کیا جو مولانا اور مفتی ٹی وی پر پروگرام پیش کرتے ہیں وہ جائز ہے؟
     (۴) اگر کیبل ٹی وی کا کام غلط ہے تو اب ہم کیا کام کریں؟

    جواب نمبر: 27960

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی(ب): 2113=1709-12/1431

    یہ کام آپ کا شرعاً جائز نہیں۔ 
    (۲) ناجائز کام کی آمدنی جائز نہیں، اس لیے ایسے پیسوں سے حج کے لیے جانا درست نہیں۔
    (۳) وہ بھی ناجائز ہے۔
    (۴) کوئی اور جائز اور حلال اور پاک وصاف کمائی والا کاروبار اختیار کریں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند