• عقائد و ایمانیات >> حدیث و سنت

    سوال نمبر: 605902

    عنوان:

    "سبحان اللّٰہ العظیم وبحمدہ ولا حول ولا قوة الاباللہ" کی تحقیق

    سوال:

    میں نے ایک عالم کو یہ حدیث سناتے ہوئے سنا تھا کہ ہر فجر کی نماز کے بعد یہ کلمات "سبحان اللّٰہ العظیم وبحمدہ ولا حول ولا قوة الاباللہ" پڑھنے سے اللہ انسان کو چار بیماریوں سے ہمیشہ محفوظ فرمائے گا؛ پاگل پن، کوڑھ پن، اندھا پن، فالج۔ ان عالم کے مطابق یہ حدیث مسند احمد اور تبرانی میں روایت کی گئی ہے۔میں نے خود بھی اپنی تھوڑی سی کوشش کر کے اس کو ڈھونڈا تھا مگر حدیث نہیں مل سکی۔اور اتنا ہی معلوم ہو سکا ہے کہ یہ حدیث غالباً مسند احمد ج۔5۔ ص۔60۔ میں درج ہے ۔ تو برائے مہربانی مجھے بتائیں کہ کیا اس عمل کا حدیث میں تذکرہ ملتا ہے؟ نیز اس حدیث کا درجہ کیا ہے (صحیح، ضعیف، وغیرہ)؟ اور کیا اس ذکر پر روز فجر کے بعد عمل کرنا چاہیے ان چار بیماریوں سے محفوظ رہنے کے لیے؟

    جواب نمبر: 605902

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa : 7-117/H=02/1443

     مسند احمد اور طبرانی میں مذکور فی السوال الفاظ والی حدیث ہمیں نہیں ملی؛ البتہ ابن السنی کی ”عمل الیوم واللیلة“ میں یہ حدیث موجود ہے جس کے الفاظ یہ ہیں ”․․․․․ أما لدنیاک فإذا صلیت الصبح فقل بعد صلاة الصبح: سبحان اللہ العظیم وبحمدہ ولا حول ولا قوة إلا باللہ - ثلاث مرات - یوقیک اللہ من بلایا أربع من الجذام والجنون والعمی والفالج ․․․․․․“، (عمل الیوم واللیلة: 69، ط: دارالبیان) البتہ یہ حدیث ضعیف ہے، اور فضائل کے باب میں اس پر عمل کی گنجائش ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند