• معاشرت >> تعلیم و تربیت

    سوال نمبر: 39168

    عنوان: بالغہ لڑكیوں كو مرد پڑھا سكتا ہے یا نہیں؟

    سوال: حضرت میں یہ جان نہ چاہتا ہوں کہ میں گرل اسکول کھولنا چاہتا ہوں جس میں صرف مسلمان بچیوں کو تعلیم دی جائیگی لیکن اس میں جو پڑھانے والے ہونگے وہ مسلم مرد استاد ہونگے کیونکہ مرد کی شکل میں مجھے اچھے استاد آسانی سے مل سکتے ہیں کیوں کہ ہمارے بہار میں اس چیز کی تھوری دقّت ہوتی ہے اچھی عورت ٹیچر کا ملنا۔ اس لئے آپ سے گزارش ہے ہے کہ آپ مجھے قران و حدیث کی روشنی میں جواب مرحمت فرمائیں۔

    جواب نمبر: 39168

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 1175-985/B=6/1433 بالغہ لڑکیوں کو پڑھانے کے لیے مردوں کو استاذ رکھنا جائز نہیں ہے، اگر پردہ کے اہتمام کے ساتھ ممکن ہو تو کرسکتے ہیں، اگر معلمات کو آپ تلاش کریں گے تو مل جائیں گی۔ آپ معلمات ہی کے ذریعہ پڑھانے کی کوشش کریں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند