• متفرقات >> دعاء و استغفار

    سوال نمبر: 64315

    عنوان: عزت پانے کے لیے کیا كرنا چاہیے؟

    سوال: اگر کوئی بے عزت ہوگیا ہو اپنے کسی ناجائز احساس کی وجہ سے تو اب واپس عزت پانے کے لیے کیا کرے؟

    جواب نمبر: 64315

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 319-319/Sd=5/1437 ناجائز احساس سے آپ کی مراد واضح نہیں ہے؟بہرحال! دنیا میں عزت حاصل کرنے کا راستہ متعین ہے کہ انسان تقوی اور طہارت کی زندگی گذارے، یعنی: اللہ کے حکموں کو پورا کرے اور حضور پاک صلی اللہ علیہ وسلم کی سنتوں کو اپنائے، گناہوں سے بچے،قرآن میں اللہ تعالی نے ارشاد فرمایا ہے: ”إِنَّ أَکْرَمَکُمْ عِنْدَ اللَّہِ أَتْقَاکُمْ “، حضرت مولانا شبیر احد عثمانی رحمہ الله اس آیت کی تفسیر کرتے ہوئے فرماتے ہیں: اصل میں انسان کا بڑا یا چھوٹا یا معزز و حقیر ہونا؛ ذات پات اور خاندان و نسب سے تعلق نہیں رکھتا؛ بلکہ جو شخص جس قدر نیک خصلت ، باادب اور پرہیزگار ہو،اُسی قدر اللہ کے یہاں معزز و مکرم ہے۔۔۔۔۔۔۔مجد و شرف اور فضیلت و عزت کا اصلی معیار نسب نہیں، تقو ی و طہارت ہے۔ دوسری جگہ اللہ تعالی کا ارشاد ہے:” وَلِلَّہِ الْعِزَّةُ وَلِرَسُولِہِ وَلِلْمُؤْمِنِینَ“ یعنی: اصلی اور ذاتی عزت تو اللہ کی ہے، اس کے بعد اسی سے تعلق رکھنے کے بدولت درجہ بدرجہ رسول کی اور ایمان والوں کی۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند