• عقائد و ایمانیات >> فرق ضالہ

    سوال نمبر: 3632

    عنوان:

    کچھ دوستوں جو شیعی عقیدہ کے ہیں، کے ساتھ افطار اور کھانے میں شریک ہونا کیسا ہے؟

    سوال:

    کچھ دوستوں جو شیعی عقیدہ کے ہیں، کے ساتھ افطار اور کھانے میں شریک ہونا کیسا ہے؟

    جواب نمبر: 3632

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 1742/ ب= 1538/ ب

     

    شیعہ اثنا عشری اپنے عقائد باطلہ کی بنیاد پر جو اُن کی کتابوں میں ملتے ہیں دائرہٴ اسلام سے خارج اور کافر و مرتد ہیں۔ مثلاً وہ لوگ قرآن کی تحریف کے قائل ہیں۔ حضرت علی کی الوہیت کے قائل ہیں یعنی انھیں خدا کا درجہ دیتے ہیں۔ حضرت عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا کو زانیہ اور چھنال مانتے ہیں جب کہ ان کی اس سے براء ة قرآن میں صراحةً کی گئی ہے۔ اپنے بارہ اماموں کومعصوم واجب الطاعة مانتے ہیں اور یہ عقیدہ رکھتے ہیں کہ ان سب کو اللہ کی طرف سے نئی شریعت اور نئی آسمانی کتاب ملی ہے۔ یہ حلال کو حرام اور حرام کو حلال کرنے کا پاور رکھتے ہیں۔ حضرت جبرئیل علیہ السلام کو خائن مانتے ہیں، یعنی اللہ نے قرآن کی آیتیں (وحی الٰہی) حضرت جبریل کو دے کر امام غائب کے پاس بھیجی تھی، مگر جب حضرت جبرئیل ان کے پاس لے جانے کے بجائے حضرت محمد مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم کے پاس پہنچائیں۔ یہ سب عقائد نصوص قرآنی کے خلاف اور متصادم ہیں اس لیے وہ کافر و مرتد قرار دے گئے ان کے ساتھ ایک دسترخوان پر کھانا دُرست نہیں۔ اسلامی حمیت کے خلاف ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند