• عبادات >> احکام میت

    سوال نمبر: 58739

    عنوان: قبر پہ پودا یا درخت لگانا کیسا ہے؟ کیا پودا لگانا سنت ہے؟ کیا پودا یا درخت لگانے سے قبر پہ عذاب رک جاتاہے ؟ یا پھر ایسا کرنے میں کوئی حرج نہیں ہے۔

    سوال: قبر پہ پودا یا درخت لگانا کیسا ہے؟ کیا پودا لگانا سنت ہے؟ کیا پودا یا درخت لگانے سے قبر پہ عذاب رک جاتاہے ؟ یا پھر ایسا کرنے میں کوئی حرج نہیں ہے۔

    جواب نمبر: 58739

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 542-647/H=7/1436-U قبر پر پودا یا درخت لگانا درست نہیں نہ ہی سنت ہے جب کہ وہ سنت ومستحب بھی نہیں تو اس کی وجہ سے عذاب کا نہ رکنا بھی ظاہر ہے، البتہ قبر پر اگر گھاس اُگ آئے تو خودرو ہری گھاس کی تسبیح سے میت کو انس ہوتا ہے پس اس کو نہ کاٹنا چاہیے لا وفي الفتاوی رد المحتار (تتمہ) یکرہ أیضًا قطع البنات الرطب من المقبرة دون الیابس کما في البحر والدرر وشرح المنیة وعللہ في الإمداد بأنہ ما دام رطبًا یسبح اللہ تعالی فیوٴنس المیت وتنزل بذکرہ الرَّحمة اھ (ج۱ ص۶۰۶، مطبوعہ نعمانیہ دیوبند) الغرض خود رو ہری گھاس وغیرہ کی تسبیح سے میت کو انس ہوتا ہے اور اس کی تسبیح کی برکت سے اللہ پاک کی خاص رحمت نازل ہوتی ہے، پس اس کو کاٹنا گویا کہ میت کا حق فوت کردینا ہے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند