• معاشرت >> لباس و وضع قطع

    سوال نمبر: 50545

    عنوان: بغیر شملہ کے عمامہ باندھنا کیسا ہے؟

    سوال: بغیر شملہ کے عمامہ باندھنا کیسا ہے؟

    جواب نمبر: 50545

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa ID: 303-97/L=4/1435-U رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم جب عمامہ باندھتے تو اس کا شملہ ضرور چھوڑدیتے ”عن ابن عمر رضي اللہ عنہما قال: کان رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم إذا اعتم سدل عمامتہ بین کتفیہ“ حضرت ابن عمر رضی اللہ عنہما فرماتے ہیں کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم عمامہ باندھتے تو شملہ دونوں کندھوں کے درمیان چھوڑدیتے۔ (مشکاة: ۳۷۴) فقہاء نے بھی شملہ چھوڑنے کو مندوب لکھا ہے، ”ندب لبس السواد وإرسال ذنب العمامة بین الکتفین إلی وسط الظہر“ (عالمگیري: ۵/ ۳۳۰) اس لیے بغیر عمامہ شملہ باندھنا خلاف اولیٰ ہوگا۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند