• معاملات >> بیع و تجارت

    سوال نمبر: 9393

    عنوان:

    حضرت گزارش یہ ہے کہ میں ایک کاروبارانٹر نیٹ کیفے کا شروع کرنے کے بارے میں سوچ رہا ہوں اور ایک کاروبار موبائل سے متعلق سوچ رہا ہوں۔ لیکن مجھے شبہ ہے وہ یہ کہ انٹر نیٹ میں بہت سی چیزیں وہ ہیں جو جائز نہیں ہیں اورپھر اس میں زیروکس کا بھی استعمال ہوتا ہے جس سے کبھی کبھی کلر فوٹوبھی نکالا جاتا ہے اورموبائل میں بھی بہت سی چیزیں ایسی ہیں جو جائز نہیں ہیں جیسے اس میں گانے وغیرہ رکھتے ہیں وہ سب تو اسی درجہ میں آتے ہیں۔ آپ بتائیں کہ انٹرنیٹ کیفے اور موبائل سے متعلق کاروبار کرسکتے ہیں یا نہیں؟ اوراگر کرسکتے ہیں تو اس کی حدود کیا ہیں؟

    سوال:

    حضرت گزارش یہ ہے کہ میں ایک کاروبارانٹر نیٹ کیفے کا شروع کرنے کے بارے میں سوچ رہا ہوں اور ایک کاروبار موبائل سے متعلق سوچ رہا ہوں۔ لیکن مجھے شبہ ہے وہ یہ کہ انٹر نیٹ میں بہت سی چیزیں وہ ہیں جو جائز نہیں ہیں اورپھر اس میں زیروکس کا بھی استعمال ہوتا ہے جس سے کبھی کبھی کلر فوٹوبھی نکالا جاتا ہے اورموبائل میں بھی بہت سی چیزیں ایسی ہیں جو جائز نہیں ہیں جیسے اس میں گانے وغیرہ رکھتے ہیں وہ سب تو اسی درجہ میں آتے ہیں۔ آپ بتائیں کہ انٹرنیٹ کیفے اور موبائل سے متعلق کاروبار کرسکتے ہیں یا نہیں؟ اوراگر کرسکتے ہیں تو اس کی حدود کیا ہیں؟

    جواب نمبر: 9393

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 2162=1989/ د

     

    موبائل اور انٹرنیٹ کا استعمال جائز مقاصد کے لیے بھی ہوتا ہے اس لیے ان دونوں کا کاروبار کرنا جائز ہے، البتہ خود ان چیزوں کو ناجائز مقاصد میں استعمال نہ کریں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند