• معاشرت >> طلاق و خلع

    سوال نمبر: 2172

    عنوان: میرا نام گلشن بی بی ہے ، شہباز نامی ایک لڑکا سے میر ا نکاح ہواتھا ، لیکن شادی سے پہلے کچھ نازیبا حالات یعنی سسرال والوں کے غلط رویہ کی بنا پرمیں نے اپنے شوہر سے خلع لینے کا فیصلہ کیا اور اس کے لیے میں کورٹ گئی ، مقدمہ کے دوران میرا شوہر جج کے سامنے سے آنے سے اکثر بچنے کی کوشش کرتاتھا ۔ پانچ سال کے بعد کورٹ نے اپنا فیصلہ دیا کہ مجھے طلاق ہوگئی ہے لیکن میرے شو ہر نے کورٹ کے کاغذا ت پر دسخط کرنے سے انکار کردیا تھا ۔ اب میرے شوہر نے ایک نیا کیس شروع کیا ہے کہ میں نے اس کو (مجھ کو ) طلاق نہیں دی ہے ، میں جاننا چاہتی ہوں کہ شریعت کی رو سے میں مطلقہ ہوں یا نہیں؟ مجھے آ پ کے جواب کا انتظار رہے گا۔

    سوال: میرا نام گلشن بی بی ہے ، شہباز نامی ایک لڑکا سے میر ا نکاح ہواتھا ، لیکن شادی سے پہلے کچھ نازیبا حالات یعنی سسرال والوں کے غلط رویہ کی بنا پرمیں نے اپنے شوہر سے خلع لینے کا فیصلہ کیا اور اس کے لیے میں کورٹ گئی ، مقدمہ کے دوران میرا شوہر جج کے سامنے سے آنے سے اکثر بچنے کی کوشش کرتاتھا ۔ پانچ سال کے بعد کورٹ نے اپنا فیصلہ دیا کہ مجھے طلاق ہوگئی ہے لیکن میرے شو ہر نے کورٹ کے کاغذا ت پر دسخط کرنے سے انکار کردیا تھا ۔ اب میرے شوہر نے ایک نیا کیس شروع کیا ہے کہ میں نے اس کو (مجھ کو ) طلاق نہیں دی ہے ، میں جاننا چاہتی ہوں کہ شریعت کی رو سے میں مطلقہ ہوں یا نہیں؟ مجھے آ پ کے جواب کا انتظار رہے گا۔

    جواب نمبر: 217201-Sep-2020 : تاریخ اشاعت

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 865/ د= 828/ د

     

    کورٹ نے کس بنیاد پر طلاق ہونے کا فیصلہ دیا؟ پورے کاغذات ہوں تو کوئی یقینی بات کہی جاسکے۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند