• عبادات >> صلاة (نماز)

    سوال نمبر: 176536

    عنوان: ’’وماجعل علیکم‘‘ بھولے سے چھوٹ گیا تو نماز كا كیا حكم ہے؟

    سوال: نماز عشاء میں سورة حج کی آخری آیت پڑھتے وقت "وماجعل علیکم" سہوا چھوٹ گیا اور"وجاھدوا فی اللہ حق جہادہ ھواجتبٰکم فی الدین من حرج" پڑھ دیا گیا تو کیا نماز ہوئی یا نہیں؟۔ برا? کرم جلد از جلد مطلع فرمائیں۔

    جواب نمبر: 17653601-Sep-2020 : تاریخ اشاعت

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:578-511/L=7/1441

    مذکورہ بالا صورت میں نماز فاسد ہوگئی۔

     (ومنہا ذکر آیة مکان آیة) لو ذکر آیة مکان آیة إن وقف وقفا تاما ثم ابتدأ بآیة أخری أو ببعض آیة لا تفسد ... أما إذا غیر المعنی بأن قرأ " إن الذین آمنوا وعملوا الصالحات أولئک ہم شر البریة إن الذین کفروا من أہل الکتاب " إلی قولہ " خالدین فیہا أولئک ہم خیر البریة " تفسد عند عامة علمائنا وہو الصحیح. ہکذا فی الخلاصة.(الفتاوی الہندیة 1/ 80 ،۸۱)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند