• عقائد و ایمانیات >> بدعات و رسوم

    سوال نمبر: 169723

    عنوان: افتتاح مکان یا دکان کے موقع پر قرآن خوانی کا حکم

    سوال: کیا نئے مکان، دکان، گھر ، گاڑی کے لیے قرآن خوانی کرانا ، کروانا کھانا کھلوانا جائز ہے ؟

    جواب نمبر: 16972301-Sep-2020 : تاریخ اشاعت

    بسم الله الرحمن الرحيم

    Fatwa:732-612/sn=8/1440

    ا ن مواقع پر اجتماعی قرآن خوانی کی رسم قابل ترک ہے اور قرآن خوانی پر روپیہ پیسہ کا لین دین کرنا یا کھانا وغیرہ کھانا کھلانا اور بھی برا ہے ؛ہاں اگر اہل خانہ یا دکان ومکان کے مالک اپنے اپنے طور پرحصول برکت وغیرہ کے لئے تلاوت کر لیں تو اس میں کوئی حرج نہیں ہے ؛ بلکہ اچھا ہے۔

    ...وفی البزازیة: ویکرہ اتخاذ الطعام فی الیوم الأول والثالث وبعد الأسبوع ونقل الطعام إلی القبر فی المواسم، واتخاذ الدعوة لقراء ة القرآن وجمع الصلحاء والقراء للختم أو لقراء ة سورة الأنعام أو الإخلاص. (الدرالمختار وحاشیة ابن عابدین (رد المحتار) 3: 148،ط:زکریا)


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند