• معاملات >> وراثت ووصیت

    سوال نمبر: 2286

    عنوان:

    میرے مرحوم دادا جو ہندستان کے رہنے والے تھے ،نے اپنے تین بیٹوں کے لیے وررثہ میں ایک پلاٹ چھوڑا تھا ۔ تین بیٹوں میں سے دو کا انتقال ہوگیا ہے، دونون مسلمان تھے۔ ا ب ایک ہی بیٹاہے جو عیسائی ہے یا کافر ۔ سوال یہ ہے کہ ان تینوں بیٹوں ( دو مرحوم مسلمان بیٹے اور ایک غیر مسلم بیٹاجو چرچ جاتاہے اور حضرت عیسی علیہ السلام پر ایمان رکھتاہے ) کے درمیان پلاٹ کی تقسیم کیسے ہوگی؟ بر اہ کرم، جلدجواب دیں۔

    سوال:

    میرے مرحوم دادا جو ہندستان کے رہنے والے تھے ،نے اپنے تین بیٹوں کے لیے وررثہ میں ایک پلاٹ چھوڑا تھا ۔ تین بیٹوں میں سے دو کا انتقال ہوگیا ہے، دونون مسلمان تھے۔ ا ب ایک ہی بیٹاہے جو عیسائی ہے یا کافر ۔ سوال یہ ہے کہ ان تینوں بیٹوں ( دو مرحوم مسلمان بیٹے اور ایک غیر مسلم بیٹاجو چرچ جاتاہے اور حضرت عیسی علیہ السلام پر ایمان رکھتاہے ) کے درمیان پلاٹ کی تقسیم کیسے ہوگی؟ بر اہ کرم، جلدجواب دیں۔

    جواب نمبر: 228601-Sep-2020 : تاریخ اشاعت

    بسم الله الرحمن الرحيم

    فتوی: 1975/ ھ= 1517/ ھ

     

    جو بیٹا چرچ جاتا ہے اور حضرت عیسیٰ علیہ السلام پر ایمان رکھتا ہے وہ مذہب اسلام کو چھوڑکر عیسائی بنا ہے یا نہیں؟ اس سلسلہ میں خود اس کا بیان اسی کے قلم سے لکھواکر اپنے استفتاء کے ساتھ منسلک کریں اور بجائے ای میل کے جواب ڈاک سے بھیجیں۔


    واللہ تعالیٰ اعلم


    دارالافتاء،
    دارالعلوم دیوبند