India

سوال # 173228

میں دل سے اللہ اور ااکے رسول کو مانتا ہوں اور میرا عقیدہ ہے کہ اللہ اور اس کے رسول اور اللہ کے حکموں کو برا بھلا کہنا کفر ہے اور ٹھکانا جہنم ہے۔ پھر بھی کچھ دنوں سے میرے ذہن میں اللہ کو گالی دینے کا خیال آتا تھا جس سے میں بہت پریشان ہو جایا کرتا تھا اس کے بعد نبی کے بارے میں بھی خیال آنے لگا میں اور پریشان ہونے لگا کبھی کبھی نبی کے بارے میں برے خیال آنے پر میرے زبان سے نکلا ہے پھر میں نے فوراََ کہا کہ نہیں ہے ۔میں صرف ہے اور نہیں ہے کہتا باقی کچھ نہیں ۔میں توبہ بھی خوب کر رہا، ہوں میری بیوی بھی ہے میں کیا، کروں؟ جلدی جواب دیجئے۔

Published on: Oct 8, 2019

جواب # 173228

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 47-33/B=01/1441



اللہ اور اس کے رسول کے بارے میں صرف دل دل میں برے خیالات، گالی کے خیالات آئے تو یہ معاف ہے، اس پر کوئی مواخذہ نہیں ہوگا۔ اور جو برے خیال دل میں آئے اور زبان سے بھی کہہ دیا تو وضاحت سے کے ساتھ صاف صاف لکھئے، اس کے بعد جواب تحریر کیا جائے گا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات