عبادات - زکاة و صدقات

Pakistan

سوال # 163006

میری بیوی کے پاس پانچ تولے سونا ہے اور کوئی چاندی نہیں ہیں وہ ٹیوشن پڑھاتی ہے جو چند روپے حاصل ہوتے ہیں وہ گھر کے اخراجات میں استعمال ہو جاتے ہیں، برائے کرم وضاحت فرمائیں کیا وہ صاحب نصاب ہے ؟

Published on: Jul 2, 2018

جواب # 163006

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1086-924/D=10/1439



بانچ تولہ سونا نصاب سے کم مقدار ہے صرف اس قدر پر تو زکاة فرض نہیں ہے لیکن اگر نقد روپے کی کچھ بھی مقدار سال کے شروع اور آخر میں رہے گی تو پھر سونے کی قیمت اور نقد روپے پر زکاة ادا کرنا ہوگا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات