India

سوال # 5666

میری بیوی ذیابیطس اور خون کے دباؤ کی مریضہ ہے، میرے چار بچے ہیں۔ اب میں مانع حمل طریقہ اختیار کرنا چاہتا ہوں۔ کیا ایسا طریقہ استعمال کرسکتاہوں، جیساکہ ڈاکٹر نے میری بیوی کی خرابی صحت کی وجہ سے بچہ کی پیدائش سے منع کیا ہے۔ برائے کرم مجھے قرآن اور حدیث کی روشنی میں مشورہ دیں۔

Published on: Jun 19, 2008

جواب # 5666

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی: 242=242/ م


 


اگر ماہر، دین دار ڈاکٹر کا مشورہ ہے کہ آئندہ ولادت کی صورت میں بچہ یا اس کی ماں کی جان کو خطرہ ہوسکتا ہے تو ایسی حالت میں عارضی مانع حمل طریقہ مثلاً کنڈوم وغیرہ اختیار کرنے کی گنجائش ہے۔ ایسا مانع حمل طریقہ اپنانا جس سے دائمی طور پر قوت تولید ختم ہوجائے جیسے نسبندی یا آپریشن کرانا یہ درست نہیں۔


واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات