India

سوال # 146492

میرے شوہر مزاج کے اچھے اور نماز کے پابند ہیں، مگر وہ مجھے میرا ذاتی خرچ (جیب خرچ) نہیں دیتے جبکہ وہ دینے کی حیثیت رکھتے ہیں، تو کیا اسلام میں عورتوں کو ذاتی خرچ (جیب خرچ) دینے سے منع ہے؟ کیا عورت کا حق نہیں بنتا اس کے ذاتی خرچ کے لیے؟ وہ شوہر سے پیسے کی طلب کرے؟

Published on: Dec 1, 2016

جواب # 146492

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 222-162/H=2/1438



آپ کو ذاتی (جیب خرچ) کی رقم کن کن ضروریات میں صرف کرنے کے لیے ضرورت در پیش ہے؟ آپ کے شوہر جبکہ مزاج کے اچھے او رنمازی ہیں تو نان نفقہ سکنیٰ سے متعلق انتظام تو اپنی حیثیت کے موافق باحسن وجوہ انجام دیتے ہی ہیں اس سے زائد کچھ مطالبہ کرنا آپ کے حق میں بہتر نہیں معلوم ہوتا حُسنِ معاشرت کا تقاضہ بھی یہی ہے کہ آپ صبر و شکر کے دامن کو مضبوط تھامے رہیں اداءِ حقوق کرتی رہیں ہر معاملہ میں اتباعِ سنت کو ملحوظ رکھیں آپ کے صبر و شکر پر جمے رہنے کے نتیجہ اور اثرات و برکات کی بدولت آپ کا گھرانہ نمونہٴ جنت بن جائے گا بہشتی زیور کو بکثرت مطالعہ میں رکھئے (ب) حیاة المسلمین (ج) فضائل اعمال (د) فضائل صدقات کو دیکھنے کا اہتمام کیجئے ان شاء اللہ بے حد فائدہ ہوگا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات