India

سوال # 2463

مسجد کے احاطے میں تیس سال سے مدرسہ چل رہا تھا اور تعلیم کا سلسلہ آج تک جاری ہے ،کبھی کبھی نما ز بھی پڑھ لیا کرتے تھے۔اب مسجد کا تعمیر ی کام ہو رہا ہے ،کیا ایسی صورت میں از روئے شرع اس جگہ پر بیت الخلاء، استنجا خانہ بنوا سکتے ہیں؟مہر بانی فرما کرفتوی مرحمت فرمائیں۔

Published on: Sep 20, 2007

جواب # 2463

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی: 523/م = 515/م


 


مسجد کے احاطے میں جس جگہ پر تیس سال سے مدرسہ چل رہا تھا اگر وہ جگہ مسجد شرعی کے حدود میں داخل نہ تھی اور اب وہاں مسجد کے لیے بیت الخلاء اور استنجاء خانہ بنوانے کی ضرورت ہے تو شرعاً اس کی اجازت ہے۔ لیکن اگر جگہ کی تنگی نہ ہو اور جس جگہ تعلیم ہوا کرتی تھی اور کبھی کبھی نماز بھی پڑھ لیا کرتے تھے اسی جگہ میں استنجاء خانہ وغیرہ بنوانا مجبوری نہ ہو تو اس حصہ کو چھوڑ کر دوسری جگہ بیت الخلاء وغیرہ بنوانا اولی ہے۔


واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات