عبادات - طہارت

India

سوال # 165446

حضرت، میرا سوال یہ ہے کہ کپڑے دھوتے وقت کپڑے نچوڑنے کی وجہ سے ہاتھوں پر چھالے پڑ جائیں اور وہ کپڑے نچوڑنے کی وجہ سے پھوٹ بھی جائیں تو کیا چھالوں سے نکلنے والا پانی کپڑوں کو لگنے سے دھوئے ہوئے کپڑے پھر ناپاک ہو جائیں گے؟ یا تمام ناپاک کپڑے دھونے کے بعد پتا چلے کہ چھالے پھوٹ گئے ہیں اور یہ پتا نہ ہو کہ دھلائی کے دوران کن کپڑوں کو اور کب چھالوں کا پانی لگا ہے، تو ایسے میں کیا تمام کپڑے پھر دوبارہ دھونے پڑیں گے؟

Published on: Oct 20, 2018

جواب # 165446

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 64-52/B=2/1440



جی ہاں! چھالے کا پانی ناپاک ہے جس کپڑے میں جس جگہ لگا ہے صرف اتناہی دھو دینا کافی ہے۔ پورا کپڑا دھونا ضروری نہیں ہے۔ اور اگر یہ معلوم نہ ہوا کہ کس کپڑے میں لگا ہے تو احتیاطاً دوبارہ سب کپڑوں کو کھنگال لے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات