عبادات - صوم (روزہ )

India

سوال # 163418

اگر کچھ لوگ مشترکہ طور پر افطار منعقد کرائیں، اور ان میں سے اکثر کے پیسے پر ہمیں حلال نہ ہونے کا اندیشہ ہو، مگر منعقد کرانے والوں میں سے ہی ایک دوست ہمیں اس بات کا یقین دلائے کہ ان ۲-۳ لوگوں نے اس افطار میں ۳۰۰۰ روپیے کا تعاون کیا ہے ، اور وہ اس پیسے سے ہی ہمیں مدعو کر رہا ہے (مطلب وہ ہمیں اس ہی پیسے میں سے کھلائگا). کیا ایسی صورت میں ہمارا ایسی جگہ افطار کرنا شرعاً جائز ہے ؟

Published on: Oct 4, 2018

جواب # 163418

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 1109-1032/SN=1/1440



آپ کے دوسست کی بات پر اگر آپ کو اعتماد ہے تو فی نفسہآپ کے لئے افطار میں شرکت کی گنجائش ہے؛ البتہ یہ بات قابل ذکر ہے کہ آج کل کی افطار پارٹیاں بالعموم ریا ونمود کے لئے منعقد کی جاتی ہیں، نیز ان میں تصویر کشی اور ویڈیو گرافی جیسے منکرات اور ناجائز امور انجام دئے جاتے ہیں؛ اس لئے افطار پارٹیوں میں شرکت سے بہرحال احتراز کرنا چاہئے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات