عبادات - صلاة (نماز)

Pakistan

سوال # 17635



میں
شادی سے پہلے نمازو ذکر کی بہت پابند تھی لیکن اب اس معاملہ میں دن بدن سست ہوتی
جارہی ہوں۔ کلمہ و استغفار تو اب بھی پڑھتی ہوں لیکن جب سے یہ پڑھا کہ نماز کے بغیر
کوئی بھی عمل قبول نہیں ہوتا مزید ذہنی الجھاؤ کا شکار ہوتی جارہی ہوں۔ ایک عجیب سی
نحوست کا اثر لگتا ہے کہ سب کچھ پتہ ہونے کے باوجود میں اتنی سست کیوں ہوتی جارہی
ہوں اور یہ صرف دینی اعتبار سے نہیں بلکہ دنیاوی اعتبار سے بھی ہے کہ گھر کا کوئی
بھی کام کرنے کا دل نہیں کرتا، استغفار تو ہر وقت پڑھتی ہوں کہ کہیں توبہ سے بھی
دور نہ ہوجاؤں۔برائے کرم میری مدد کریں مجھے اس ذہنی کیفیت سے نکلناہے۔



Published on: Nov 18, 2009

جواب # 17635

بسم الله الرحمن الرحيم



فتوی(م):1739=1739-11/1430



 



اگر
نماز میں سستی ہورہی ہے تو بلا کسی تأمل کے اب سے پنجوقتہ نمازوں کی پابندی شروع
کردیں، فضائل اعمال، بہشتی زیور وغیرہ کا مطالعہ کیجیے اس سے شوق اور خوف پیدا
ہوگا، توبہ استغفار کرتی رہیں گھر کی عورتوں اور محلہ پڑوس کی عورتوں کو بھی نماز
اور دین کی باتوں کی تعلیم وتبلیغ شروع کردیجیے، اس سے خود بھی عمل کی توفیق ہوگی۔




واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات