عبادات - صلاة (نماز)

Pakistan

سوال # 175692

اکثر دیکھا گیا ہے کہ کچھ لوگ گرد مٹی سے الرجی کی وجہ سے منہ پر ماسک لگا کر رکھتے ہیں جس سے چہرے کا کافی حصہ چھپا رہتا ہے اور اسی حالت میں وہ نماز بھی پڑھ لیتے ہیں، اسی طرح سردیوں میں لوگ چادر اس طرح اوڑھتے ہیں جس سے منہ چھپ جاتا ہے، کیا اس حالت میں نماز ہو جاتی ہے؟

Published on: Jan 16, 2020

جواب # 175692

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 492-371/B=05/1441



چادر اس طرح اوڑھ کر نماز پڑھنا کہ منہ اورناک چھپ جائے اسی طرح ماسک لگا کر نماز پڑھنا جس میں منہ اور ناک چھپ جاتے ہیں، مکروہ ہے۔ یکرہ اشتمال الصّماء والاعتجار، والتلثم ۔ قال الشامی: قولہ: ”والتلثم“ وہو تغطیة الأنف والفم في الصّلاة ؛ لأنّہ یشبہ فعل المجوس حال عبادتہم النیران ۔ (الدر مع الرد، کتاب الصلاة، باب مایفسد الصّلاة وما یکرہ فیہا، ۲/۴۲۳، زکریا دیوبند)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات