عبادات - صلاة (نماز)

South Africa

سوال # 17076



میں
نے ایک مسئلہ پوچھنا ہے کہ اگرایک بندہ فرض نماز پڑھ رہا ہے جماعت کے ساتھ پہلی صف
میں اور دوسری رکعت میں اس کا وضو ٹوٹ گیا تواب وہ کیا کرے؟ جواب ملا کہ وہ وہاں
سے نکلے وضو کرے اور دوبارہ نماز میں شامل ہوجائے۔ میں آپ سے یہ پوچھنا چاہتاہوں
کہ اگر اس بندہ کے پیچھے بیس صفیں ہیں اور وہ کھڑا بھی امام کے پیچھے ہوا ہے تب
بھی کیا یہی حکم ہے؟ اگر ایسا ہی ہے تو کیا ایسی صورت میں نمازیوں کے سامنے سے
گزرنے کی اجازت ہے؟ مہربانی فرماکر جواب ارسال فرمادیں۔



Published on: Nov 7, 2009

جواب # 17076

بسم الله الرحمن الرحيم



فتوی(ھ):2076=1673-11/1430



 



اگر
نکل کر جانے میں دقت وپریشانی ہو تو نماز کو موقوف کرکے اپنی جگہ بیٹھ جائے امام
کے سلام پھیرنے کے بعد نکل کر وضوء کرے اور پھر از سر نو فرض پڑھے۔




واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات