عبادات - صلاة (نماز)

Fiji

سوال # 1108

کیا آپ صلی اللہ علیہ وسلم سے اذان سے پہلے سنتیں پڑھنا ثابت ہے؟ مثلاً جمعہ کی سنتیں وغیرہ۔

Published on: Aug 11, 2007

جواب # 1108

بسم الله الرحمن الرحيم

(فتوى: 855/ب = 55/تب)


 

وقت کے داخل ہوجانے کے بعد فرض کی سنتیں پڑھی جاسکتی ہیں، اذان ہوئی ہو یا نہ ہوئی ہو، البتہ سنتوں کا فرض سے متصل پڑھنا زیادہ افضل ہے: قال ابن عمر وأي فصل أفضل من السلام قال محمد بقول ابن عمر نأخذ وھو قول أبي حنیفة (کذا في تعلیق ابن عابدین علی البحر، ط زکریا، ج۲ ص۸۵) اذان سے پہلے سنتوں کا پڑھنا حضور صلی اللہ علیہ وسلم سے ثابت نہیں اس کی وجہ یہ ہے کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کے عہد مبارک میں اذان وقت کے داخل ہوتے ہی ہوجایا کرتی تھی۔

واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات