معاشرت - اخلاق و آداب

India

سوال # 160252

کیا قرآن و حدیث کی روشنی میں کھڑے ہوکر پانی پینا جائز ہے؟

Published on: Apr 22, 2018

جواب # 160252

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:806-661/B=8/1439



عام حالات میں کھڑے ہوکر پانی پینا خلاف سنت اور مکروہ ہے؛ البتہ آب زمزم اور وضو کے بعد لوٹے میں بچا ہوا پانی کھڑے ہوکر پی سکتے ہیں۔ ولعل الأوجہ عدم الکراہة إن لم نقل بالاستحباب؛ لأن ماء زمزم شفاء وکذا فضل الوضوء (رد المحتار: ۱/ ۲۵۵، کتاب الطہارة/ مطلب في مباحث الشرب قائما، ط: زکریا) یستحب أن یأتي زمزم کما في الفتح فیشرب من مائہا وکیفیتہ ․․․ ویشربہ قائما أو قاعدًا، (غنیة الناسک: ۱۳۶/ فصل في الأخذ في الطواف الخ ط: مکتبہ یادگار شیخ سہارنفور)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات