متفرقات - دیگر

Pakistan

سوال # 164847

میرا سوال یہ ہے کہ اگر میاں بیوی دور ہوں اور وہ زنا جیسے قبیلے اور حرام گناہ میں مبتلا ہونے کے ڈر سے ایک دوسرے کے ساتھ فون پر ہی ویڈیو کال یا ایک دوسرے کی تصاویر کے ذریعہ راحت حاصل کرتے ہیں تو شرعی لحاظ سے اسکا کیا حکم ہے ؟

Published on: Sep 11, 2018

جواب # 164847

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1493-1243/D=12/1439



ویڈیو کالنگ میں جو تصویر ظاہر ہوتی ہے وہ تصویر کشی کے ذریعہ ہوتی ہے اور تصویر کشی ناجائز ہے، پس اس سے احتراز کریں۔



البتہ سخت گناہ یا زنا میں مبتلا ہونے کا اندیشہ ہو کہ ویڈیو سے بات چیت کیے بغیر زنا سے بچنے اور تسکین کی کوئی صورت نہ ہو تو ویڈیو گرافی کے ذریعہ بات چیت کرنے کی گنجائش ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات