متفرقات - دیگر

india

سوال # 147027

فضائل اعمال میں ایک شعر ہے اس پہ اعتراض کیا جاتا ہے ،رہا جمال پہ تیرے حجاب بشریت،نجانا کون ہے کچھ بھی کسی نے جز ستار (صفحہ 124 فضائل درود شریف پانچویں فصل)۔عتراض یہ کہ اللہ کے علاوہ آپ کو کوئی پہچان ہی نہیں سکا تو یہ جھوٹ ہے ،اس شعر کا کیا مطلب ہے ۔ برائے مہربانی مدلل جواب دیں۔

Published on: Dec 28, 2016

جواب # 147027

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 323-292/L=3/1438



 



پہچاننے سے مراد شعر میں ذات اور شخصیت کو پہچاننا نہیں ہے بلکہ رتبہ اور مرتبہ و مقام کا شعر میں ذکر ہے اور مطلب یہ ہے کہ آپ کا مقام و مرتبہ یعنی آپ کس مقام پر فائز تھے یہ اللہ کے سوا کسی کو معلوم نہ ہوسکا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات