عبادات - قسم و نذر

India

سوال # 2187

میں نے منت مانی تھی کہ اگر میں کامیاب ہوگیا تو روز کورس مکمل ہونے تک ۶/ رکعات شکرانہ نماز پڑھوں گا، لیکن کچھ وجوہات اور کچھ لاپرواہی کی وجہ سے نہیں کرسکا، اب میں کیا کروں؟ کیا اب مجھے وہ تما م نمازیں ادا کرنا ضروری ہے؟ براہ کرم، تفصیلی جواب دیں۔

Published on: Nov 27, 2007

جواب # 2187

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی: 690/ م= 685/ م


 


نذر، صحیح اور منعقد ہونے کے بعد ناذر (نذر ماننے والے) ذمہ منذور (جس چیز کی نذر مانی گئی ہے) کی ادائیگی لازم ہوتی ہے، لقولہ تعالی: وَلْیُوْفُوْا نُذُوْرَھُمْ. صورتِ مسئولہ میں آپ کی نذر جس کامیابی پر معلق تھی جب وہ حاصل ہوگئی تو آپ کے ذمہ منذور یعنی کورس مکمل ہونے تک یومیہ چھ رکعت کی ادائیگی لازم ہوگئی، اگر دورانِ کورس آپ ان نمازوں کو ادا نہیں کرسکے تو اب بھی ان کی ادائیگی واجب ہے۔ اس لیے کہ نذر میں زمان ومکان وغیرہ کی تعیین لازم نہیں ہوتی، وقت مقررہ گذرنے کے بعد بھی منذور کی ادائیگی ہوسکتی ہے، پس صورتِ مذکورہ میں کورس مکمل ہونے تک کا جو زمانہ ہے اس کا حساب لگا کر یومیہ 6/ رکعت نمازوں کے اعتبار سے جتنی رکعات نمازیں ہوتی ہیں ان سب کو ادا کریں، ھٰکذا في کتب الفقہ۔


واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات