عبادات - جمعہ و عیدین

Pakistan

سوال # 8227

کیا ثیاب بذلہ میں بھی صدقہ فطر واجب ہے جب وہ زائد از ضروریات ہوں؟ کتنی مقدار ہے کہ اس سے استعمال ہونے والے کپڑے زائد ہوں تووہ موجب صدقہ فطر اور موثر فی نصاب حرمان الزکوة ہو؟ اور کیا سردی کے لیے رکھے ہوئے کپڑے زائد از ضروریات ہیں حتی کہ شمار ہوں حرمان الزکوة سے اور وجوب صدقہ فطر سے؟

Published on: Oct 25, 2008

جواب # 8227

بسم الله الرحمن الرحيم

فتوی: 2084=1594/ب


 

ثیاب بذلہ کی وجہ سے صدقہ فطر واجب نہیں۔ اور سردی کے لیے جو کپڑے بناکر رکھے ہیں اوراستعمال کے لیے رکھے ہیں۔ اس میں بھی صدقٴ فطر واجب نہ ہوگا۔ اوراگر ایسے شوقیہ بنوالیے ہیں او رکبھی پہننے کی نوبت نہ آئی یعنی ضرورت سے زائد اور محض رکھے ہوئے ہیں، تو اس کی قیمت نصاب میں شمار ہوگی۔ اورمقدار نصاب کو پہنچنے کی صورت میں صدقہٴ فطر واجب ہوگا۔

واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات