عبادات - جمعہ و عیدین

India

سوال # 17016



عید
کی نماز میں امام صاحب نے پہلی رکعت میں تین زائد تکبیریں قرأت کے بعد کہیں اس
صورت میں کیا نماز خراب ہوگئی؟اور اگر امام پہلی رکعت میں بالکل تین زائد تکبیر نہ
کہیں صرف دوسری رکعت کی قرأت کے بعد تین زائد تکبیر کہیں یعنی چھ زائد تکبیرات میں
سے صرف تین زائد تکبیرات کہیں اور سجدہ سہوبھی نہ کریں تو کیا اس صورت میں نماز ہو
سکتی ہے ؟ جواب سے نوازیں۔



Published on: Nov 7, 2009

جواب # 17016

بسم الله الرحمن الرحيم



فتوی(ل):1769=1384-11/1430



 



(۱) جی ہاں! نماز ہوگئی۔ (۲) پہلی رکعت میں سہواً تین
زائد تکبیر چھوڑنے کی وجہ سے سجدہٴ سہو واجب ہوگیا، البتہ چونکہ عید کی نماز میں
ازدحام کی وجہ سے سجدہٴ سہو نہ کرنے کا حکم ہے، اس لیے صورت مسئولہ میں نماز بغیر
سجدہٴ سہو کے درست ہوگئی۔




واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات