عبادات - جمعہ و عیدین

United Arab Emirates

سوال # 16863



ہماری
مسجد میں امام صاحب عیدالفطر کا صرف ایک ہی خطبہ دیتے ہیں۔ جب ان سے کہا گیا تو وہ
کہتے ہیں ایک خطبہ سنت ہے اور دو خطبے درست نہیں ہیں۔ (
۲)کیا جمعہ کی فرض نماز سے
پہلے چار رکعت سنت موٴکدہ ہے؟ برائے کرم مجھ کو صرف صحاح ستہ کی کسی کتاب سے حوالہ
عنایت فرماویں۔



Published on: Nov 9, 2009

جواب # 16863

بسم الله الرحمن الرحيم



فتوی(م):1660=1660-11/1430



 



امام
صاحب سے کہیے، یہ بات کہاں سے ثابت ہے، پورا حوالہ کے ساتھ اپنے قلم ودستخط سے لکھ
کر ہمیں دیجیے، کتب فقہ وفتاویٰ میں تو دوخطبوں کا مسنون ہونا مصرح ہے۔



(۲) اس بارے میں روایت مصنف
عبدالرزاق میں موجود ہے:
أخبرنا الثوري عن عطاء بن السائب عن أبي عبد الرحمن السلمي
قال: کان عبد اللہ بأمرنا أن نصلي قبل الجمعة أربعًا وبعدھا أربعًا

رواہ عبد الرزاق في مصنفہ کذا في نصب الرایة (
۱/۳۱۸) وفي الدرایة: رجالہ ثقات
أھ (ص:
۱۳۳) وفي آثار السنن، إسنادہ صحیح (۲/۹۹۶) اھ وہو موقوف في حکم
المرفوع فإن الظاہر إنہ إنما یأمر بہذا لما ثبت عندہ من النبي صلی اللہ علیہ وسلم
فیہ شيء

(إعلاء السنن:
۷/۷)




واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات