عبادات - جمعہ و عیدین

India

سوال # 167353

کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام مسئلہ ذیل کے سلسلے میں چھوٹا گاؤں جہاں جمعہ کی نماز ہوتی اور گاؤں کے اکثر لوگ جمعہ کی نماز ادا کرنے گاؤں سے دور قصبہ میں جاتے ہیں جس کی وجہ سے گاؤں کی مسجد میں ظہر کی نماز باجماعت ادا نہیں ہوتی یہانتک کہ اذان بھی نہیں ہوتی کی فرضیت ختم ہوجاتی ہے کیا اس طرح جمعہ ادا کرنے سے ظہر؟

Published on: Dec 23, 2018

جواب # 167353

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 413-361/M=04/1440



چھوٹے گاوٴں (قریہ صغیرہ) میں جہاں جمعہ جائز نہیں ہے ایسے گاوٴں کے لوگ اپنے گاوٴں میں جمعہ کے دن ظہر کی نماز باجماعت پڑھیں، اُن پر لازم نہیں کہ اپنے گاوٴں سے دور کسی قصبہ یا شہر میں جاکر نماز جمعہ ادا کریں، لیکن اگر گاوٴں کے لوگ جمعہ کو اپنے گاوٴں میں نماز ظہر نہ پڑھ کر قصبہ یا شہر میں جاکر نماز جمعہ ادا کرلیں تو وقتیہ فریضہ ادا ہو جائے گا اور ظہر ساقط ہو جائے گا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات