عبادات - جمعہ و عیدین

India

سوال # 154633

کیا ایام تشریق کی تکبیرات فوت ہو جائے اور اگر ان نمازوں کی قضاء ایام تشریق کے علاوہ میں کی جائے تو کیا تکبیرات کی قضاء بھی کرنی ہوگی؟

Published on: Oct 7, 2017

جواب # 154633

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa: 1501-1494/L=1/1439



تکبیراتِ تشریق کا پڑھنا ایامِ تشریق کے ساتھ خاص ہے ؛لہذاایامِ تشریق میں قضا کرنے کی صورت میں تکبیرِ تشریق پڑھنے کا حکم ہے (بشرطیکہ اسی سال کے ایامِ تشریق ہوں آئندہ سال کے نہ ہوں)غیر ایامِ تشریق میں ایامِ تشریق کی نمازوں کی قضا کی جائے تو تکبیراتِ تشریق کے پڑھنے کا حکم نہیں ہے۔ ومن نسی صلاةً من أیام التشریق فذکرہا فی أیام التشریق من تلک السنة قضاہا وکبر،کذا فی الخلاصة،واذا فاتتہ صلاة قبل ہذہ الأیام فقضاہا فیہا لا یکبر وکذا لو فاتتہ صلاةفی أیام التشریق فقضاہا فی غیر أیام التشریق أو قضاہا فی أیام التشریق من قابل لا یکبر․(الہندیہ:۱/۱۵۲)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات