عبادات - جمعہ و عیدین

Saudi Arabia

سوال # 14360



یہاں
سعودی عربیہ میں سوائے حرمین کے میں نے دیکھا ہے کہ جمعہ کے دن تمام مسجدوں میں
امام خطبہ یاتو ظہر کا وقت ہونے سے پہلے یا ٹھیک ظہر کے وقت شروع کردیتے ہیں۔ میرا
سوال یہ ہے کہ کیا میں جمعہ کے دن چار رکعت سنت ظہر کا وقت شروع ہونے سے پہلے پڑھ
سکتا ہوں، کیوں کہ یہاں پر ایسا کہا جاتا ہے کہ جمعہ کے دن زوال (مکروہ وقت) نہیں
ہے؟



Published on: Jul 5, 2009

جواب # 14360

بسم الله الرحمن الرحيم



فتوی:
1102=1102/م



 



صحت
جمعہ کے لیے وقت کا ہونا شرط ہے، اور جمعہ کا وقت وہی ہے جو ظہر کا وقت ہے، اور
ظہر کا وقت زوال آفتاب (استوائے شمس کا مکروہ وقت ختم ہونے کے بعد) سے شروع ہوتا
ہے، پس زوال یعنی ظہر کا وقت شروع ہونے سے پہلے جمعہ کا خطبہ پڑھنا صحیح نہیں،
دیگر ایام کی طرح جمعہ کے دن بھی مکروہ وقت (استوائے شمس کا) ہوتا ہے۔ پس جمعہ کا
وقت شروع ہونے سے پہلے چار رکعت سنت جمعہ ادا کرنا درست نہیں۔ حدیث میں ہے:
رُوي عن النبي صلی اللہ
علیہ وسلم أنہ لما بعث مُصعبَ بن عمیر إلی المدینة قال لہ: إذا مالت الشمس فصلّ
بالناس الجمعةَ (البدائع)




واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات