متفرقات - اسلامی نام

India

سوال # 165926

میں نے اسلامی تاریخ کافی پڑھی ہوئی ہے جس کی وجہ سے میں حضرت خالد اور حضرت ضرّار کی شجاعت سے بہت زیادہ متاثر ہوا ہوں۔ اسی وجہ سے میں نے اپنے پہلے بیٹے کا نام خالد احمد اور دوسرے کا نام ضرّار احمد رکھا ہوں۔ میں اپنے بیٹوں کو بھی ان جیسا بہادر اور اسلام کا جاں نثار بنانا چاہتا ہوں۔ ضرّار نام رکھتے وقت میں نے استخارہ بھی کیا تھا اور مجھے اس نام پر کافی اطمینان بھی ہوا۔ آپ کی ویب سائٹ پر بھی اردو سوال نمبر 47572 اور 31233 میں آپ نے اس کی اجازت دی ہے ۔ لیکن ہر کچھ دن بعد مجھے کوئی نہ کوئی مل جاتا ہے جو اس نام پر اعتراض کرتا ہے ۔ براہِ کرم مجھے بتائیں کے میں ایسے لوگوں کو کیا جواب دوں اور کیسے مطمئن کروں؟

Published on: Nov 4, 2018

جواب # 165926

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 199-178/B=2/1440



یہ صحابی جن کی شجاعت بہت مشہور ہے ان کا نام ضِرَارْ ہے، بہ وزنِ کتاب، ضَرَّارْ نہیں ہے۔ یہ مالک بن اوس الْاَزوَر کے بیٹے ہیں، یہ صحابی بہت بڑے بہادر تھے اور بہت بڑے شاعر بھی تھے۔ حضرت خالد بن الولید کے حکم سے انہوں نے ہی مالک بن نویرہ کو قتل کیا تھا۔ صحابی کے نام پر نام رکھنا بہت باعث برکت ہے، اور افضل ہے۔ اگر کوئی اس نام پر اعتراض کرے یا ٹوکے تو یہ اس کی کم علمی اور بدنصیبی ہے۔ آپ اس کا تلفظ بدل دیں۔ ضَرَّار راء کی تشدید کے ساتھ نہ بولیں بلکہ ضَادْ کے زیر کے ساتھ اور راء کو بغیر تشدید کے ساتھ بولیں۔ اور لوگوں کو بھی یہی بتائیں۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات