عقائد و ایمانیات - اسلامی عقائد

Pakistan

سوال # 172107

میں سنتا رہتا ہوں کہ ہم آپﷺ کے امتی ہیں۔ اور اس وجہ سے کل قیامت میں ہم سے پوچھ ہوگی کہ دین مٹتا رہا اور تم نے کیا کیا۔ یا جو لوگ کلمہ کے بغیر مریں گے تو ہم سے پوچھ ہوگی کہ ان کو کلمہ کیوں نہیں پہنچایا۔ کیا یہ درست ہے۔ ساری دنیا میں جانا میری ذمہ داری ہے۔ قرآن و حدیث کی روشنی میں ارشاد فرمائیں۔

Published on: Aug 8, 2019

جواب # 172107

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:994-915/sd=12/1440



صحابہٴ کرام، تابعین اور علمائے امت کے ذریعے دنیا میں اسلام کی دعوت پہنچ چکی ہے، اس لیے ساری دنیا میں جانا آپ کی ذمہ داری نہیں ہے اور کلمہ کے بغیر دنیا سے جانے والے شخص کے بارے میں قیامت میں پوچھ نہیں ہوگی، ہاں ہرمسلمان کا اپنی استطاعت کے بقدر دوسروں کو، بالخصوص ماتحتوں کو دین کی طرف متوجہ کرتے رہنا اور نافرمانیوں سے روکنا اور حسب موقع خلاف شرع کاموں پر نکیر کرنا ضروری ہے، تفصیل کے لیے دیکھئے معارف القرآن، تفسیر سورہٴ والعصر۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات