عقائد و ایمانیات - اسلامی عقائد

Pakistan

سوال # 161559

میری خالہ کی اپنی کوئی اولاد نہیں، اس کے شوہر انتقال کرگئے۔ وہ اپنے خاوند کی دوسری بیوی کے بیٹے کو اپنا بیٹا بناکر اپنے آبائی جائیداد کی زمین میں حصہ کا وارث بنانا چاہتی ہے، کیا وہ ایسا شرعاً کرسکتی ہے؟ یا کچھ حصہ اپنی جائیداد کا دے سکتی ہے؟ حالانکہ اس کے میکے والوں کو یہ بات پسند نہیں۔

Published on: May 24, 2018

جواب # 161559

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1118-914/sd=9/1439



کسی کو بیٹا بنانے سے وہ وارث شرعی نہیں ہوجاتا ہے ، لہذا صورت مسئولہ میں اگر آپ کی خالہ اپنے شوہر کی دوسری بیوی کے بیٹے کو اپنا بیٹا بنالیتی ہے ، تو اس کی وجہ سے دوسری بیوی کا بیٹا خالہ کا شرعی وارث نہیں بنے گا؛ ہاں اگر خالہ زندگی میں اپنی مملوکہ جائداد میں سے اُس کو کچھ ہبہ کرنا چاہیں، تو کرسکتی ہیں ۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات