عقائد و ایمانیات - اسلامی عقائد

Pakistan

سوال # 146776

میں یونیورسٹی کا سٹوڈنٹ ہوں،ہمارا ایک استاد ہے جس کا کہنا ہے کہ حضرت عیسٰی علیہ السلام اور امام مہدی علیہ السلام کا آنا قرآن مجید یا حدیث سے ثابت نہیں ہے ، اگر آپ قرآن وحدیث کا حوالہ دیں تو بڑی مہربانی ہوگی۔

Published on: Jan 7, 2017

جواب # 146776

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 234-192/Sd=4/1438



 



آپ کے استاد کی بات قطعا غلط ہے، قرآن کریم اور احادیث سے ثابت ہے کہ حضرت عیسی علیہ السلام اور امام مہدی علیہ السلام قیامت کے قریب دنیا میں تشریف لائیں گے۔ قال اللّٰہ تعالی : وَإِنْ مِنْ أَہْلِ الْکِتَابِ إِلَّا لَیُؤْمِنَنَّ بِہِ قَبْلَ مَوْتِہِ وَیَوْمَ الْقِیَامَةِ یَکُونُ عَلَیْہِمْ شَہِیدًا (النساء، ۱۵۹) قال النبي صلی اللّٰہ علیہ وسلم : والذي نفسي بیدہ لیوشکن أن ینزل فیکم ابن مریم حکماً وعدلاً، فیکسر الصلیب، ویقتل الخنزیر ۔۔۔۔۔۔ ثم یقول أبو ہریرة: واقروٴوا ان شئتم : وَإِنْ مِنْ أَہْلِ الْکِتَابِ إِلَّا لَیُؤْمِنَنَّ بِہِ قَبْلَ مَوْتِہِ وَیَوْمَ الْقِیَامَةِ یَکُونُ عَلَیْہِمْ شَہِیدًا۔ (البخاري:۱/۴۹۰، باب نزول عیسی) قال اللّٰہ تعالی : وَإِنَّہُ لَعِلْمٌ لِلسَّاعَةِ فَلَا تَمْتَرُنَّ بِہَا۔ (الزخرف :۶۱) قال ابن کثیر: أي: آیة للساعة ۔۔۔وقد تواترت الأحادیث عن رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم أنہ أخبر بنزول عیسی قبل یوم القیامة اماماً عادلاً و حکماً مقسطاً ۔ ( ابن کثیر :۵/۵۳۰) وقال ابن حضر: وتواترت الأخبار بأن المہدي من ہذہ الأمة وأن عیسی یصلي خلفہ ۔۔۔۔ ( فتح الباري ؛۶/۴۹۴)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات