معاملات - سود و انشورنس

India

سوال # 161894

ایک شخص سود کی قسط کی ادائیگی کیلیے کسی سے ادھار رقم ایک مدت کیلیے طلب کرے تو کیا اس سودی معاملہ میں مدد کی گنجائش ہے ؟ اور کیا مدد کرنے والے کا بھی سودی معاملہ میں شمار ہوگا اور وہ بھی گناہگار ہوگا؟

Published on: May 27, 2018

جواب # 161894

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1135-935/sd=9/1439



اس کو سودی معاملہ میں مدد کرنا نہیں کہا جائے گا، اس نیت سے قرض دیا جائے کہ وہ جلد از جلد اپنا سودی قرضہ ادا کرکے ذمہ فارغ کرلے، اس نیت سے قرض دینا مستحسن ہوگا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات