متفرقات - تاریخ و سوانح

pakistan

سوال # 146087

کیا صحابی رسول عمار بن یاسر رضی اللہ کا حضرت عثمان کے قتل کی حمایت میں کردار تھا کیوں کہ وہ مصر سے والا نہ آئے تھے ۔ رہنمائی فرمائیں۔

Published on: Nov 29, 2016

جواب # 146087

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 175-167/L=2/1438



حضرت عثمان غنی رضی اللہ عنہ کے قتل کیے جانے پر صحابہ کرام رضوان اللہ علیہم اجمعین میں سے کوئی راضی نہ تھا؛ البتہ بعض صحابہ کرام بر بنائے مصلحت یہ چاہتے تھے کہ حضرت عثمان رضی اللہ عنہ خود خلافت سے دستبردار ہو جائیں جن میں عمار بن یاسر رضی اللہ عنہ بھی تھے۔ وأما مایذکرہ بعض الناس من أن بعض الصحابة أسلمہ ورضي بقتلہ، فہذا لایصح عن أحد من الصحابة أنہ رضي بقتل عثمان رضی اللہ عنہ بل کلہم کرہہ ومقتہ، وسب من فعلہ، ولکن بعضہم کان یود لو خلع نفسہ من الأمر: کعمار بن یاسر، ومحمد بن أبي بکر، وعمر بن الحصین وغیرہم۔ (البدایہ والنہایہ: ۷/۱۹۸)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات