متفرقات - حلال و حرام

india

سوال # 160270

اگر ناظم مدرسہ اپنے یہاں کسی سفیر کو تنخواہ کے ساتھ ہر 10000دس ہزار روپئے پر دوہزار روپئے انعام بھی متعین کرتاہے تو یہ صورت مسئلے کے اعتبار سے جائز ہے یا ناجائز ؟دلائل کے ساتھ وضاحت فرمائیں۔

Published on: Apr 16, 2018

جواب # 160270

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:787-736/M=7/1439



اگر سفیر کی تنخواہ مقرر ہے اور وہ چندے کی پوری رقم لاکر مدرسہ کے حوالے کردیتا ہے اور مدرسہ اپنی صواب دید کے مطابق یا طے شدہ ضابطے کے مطابق اس کی حسن کارکردگی کی بنا پر کچھ فیصدی کمیشن (انعام) اپنے امدادی فنڈ سے دیتا ہے تو ایک قول پر اس کی گنجائش ہے لیکن دس ہزار پر دو ہزار روپئے یعنی بیس فیصد انعام رکھنا جب کہ تنخواہ اس کے علاوہ ہے یہ مقدار زیادہ ہے، بہتر یہ ہے کہ حسن کارکردگی کی بنا پر اس کی تنخواہ میں معقول اضافہ کردیا جائے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات