عقائد و ایمانیات - حدیث و سنت

Pakistan

سوال # 166599

کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام اس مسئلے کے بارے میں؟ جو لوگ زلفیں رکھتے ہیں وہ صرف کانوں کی طرف کے بالوں کو کاٹ کر سیٹ کراتے ہیں اب ان بالوں کا کاٹنا قزع میں شامل ہے یا نہیں؟ برائے مہربانی جواب مرحمت فرما کر ممنون فرمائیں۔

Published on: Nov 6, 2018

جواب # 166599

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:225-162/sd=2/1440



زلفی بال رکھنے کی صورت میں کانوں کی طرف کے زائد بالوں کو کاٹ کر بالوں کو سیٹ کرنا قزع میں داخل نہیں ہے ، ہاں اگر اس طرح کاٹے جائیں کہ اطراف سے بال کم ہوجائیں اور درمیان سے زیادہ، تو یہ صورت قزع میں داخل ہوکر مکروہ ہوگی ۔



 والقزع أربعة انواع: أحدہا: أن یحلق من رأسہ مواضع من ھاھنا و ھاھنا ۔ الثانی: أن یحلق وسطہ ویترک جوانبہ ۔ الثالث: أن یحلق جوانبہ ویترک وسطہ ۔ الرابع: أن یحلق مقدمہ ویترک موخرہ وہذا کلہ من القزع ۔ (تحفة المودود بأحکام المولود: ۱۴۷-۱۴۸، الباب السابع، ط: دار علم الفوائد بیروت)۔قال ابن عابدین:ویکرہ القزع: وہو أن یحلق البعض ویترک البعض۔ (رد المحتار: ۵۹۴/۹، کتاب الحظر والاباحة، باب الاستبراء وغیرہ، ط: زکریا دیوبند)۔ 



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات