عقائد و ایمانیات - حدیث و سنت

India

سوال # 165339

ایک نو مسلم نے سوال پوچھا ہے کہ حضرت آدم (علیہ السلام) کے بعد اللہ نے ایک عورت کو پیدا کیا اور وہ عورت آدم کی کوئی بات سنا نہیں کرتی تھی جس کی وجہ سے اللہ نے اس کو عذاب دیدیا اور وہ مرگئی، اس کے بعد اللہ نے حواء کو بنایا۔ یہ واقعہ ایک عیسائی عالم سے نومسلم نے سنا ہے۔ کیا یہ بات سچ ہے؟

Published on: Oct 17, 2018

جواب # 165339

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 15-26/D=2/1440



قرآن و حدیث کی صراحت سے بھی ثابت ہے کہ آدم علیہ السلام تمام انسانوں کے باپ اور حواء سب کی ماں ہیں جو آدم علیہ السلام کی پسلی سے پیدا کی گئی ہیں۔ حواء سے پہلے درمیان میں کسی عورت کا پیدا کیا جانا ہمارے علم میں نہیں نہ اس کی تحقیق کی ضرورت ہے آخرت میں جن اعمال پر نجات موقوف ہے اس کے تحصیل کی فکر ضروری ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات