عقائد و ایمانیات - حدیث و سنت

India

سوال # 160931

کیا کھانے کے بعد برتن کو چاٹنا ضروری ہے ؟ اور کیا یہ سنّت ہے ؟ میں نے سنا ہے کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کا برتن میں چہرہ نظرآتا تھا جب وو برتن کو چاٹتے تھے ۔ براہ کرم، اس پر روشنی ڈالیں۔

Published on: May 5, 2018

جواب # 160931

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1007-817/sd=8/1439



برتن میں کھانے کے جو اجزاء باقی رہ جاتے ہیں ، اُن کو اچھی طرح صاف کر کے کھانا مسنون ہے ، حدیث میں مطلق برتن صاف کرنے اور انگلیوں کے چاٹنے کا ذکر ہے ، آپ نے جو لکھا ہے کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم کے برتن میں چہرہ نظر آتا تھا ، ہمیں اس کا ذکر تو کسی حدیث میں نہیں ملا؛ البتہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم بھی برتن کو صاف کر کے کھانا تناول فرماتے تھے۔ عن أنس، أن رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کان إذا أکل طعاما لعق أصابعہ الثلاث، قال: وقال: إذا سقطت لقمة أحدکم فلیمط عنہا الأذی ولیأکلہا، ولا یدعہا للشیطان وأمرنا أن نسلت القصعة، قال: فإنکم لا تدرون فی أی طعامکم البرکة۔ ( مسلم ، رقم : ۱۳۶ )



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات