India

سوال # 164712

کیا شوھر کا بچایا ہوا جھوٹا دودھ بیوی کو نہیں پینا چاہئے ؟یا بیوی کا بچا ہوا جھوٹا دودھ شوہر کو نہیں پینا چاہئے کیا اس میں کوئی کراہت ہے ؟ اس بارے میں برائے کرم ضاحت فرمائیں ۔ عین نوازش ہو گی۔

Published on: Sep 11, 2018

جواب # 164712

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:1407-1081/B=12/1439



شوہر اپنی بیوی کا جھوٹا اور بیوی اپنے شوہر کا چھوٹا دودھ ہو چائے ہو کھانا ہو کھا پی سکتی ہے، اس میں کوئی کراہت نہیں، احادیث میں ہے کہ حضور صلی اللہ علیہ وسلم کا جھوٹا حضرت عائشہ نے کھایا اور حضرت عائشہ کا جھوٹا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے کھایا، یہ تو الفت ومحبت کی بات ہے، اس میں کسی قسم کی کوئی کراہت نہیں ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات