India

سوال # 158607

کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ فارمی مرغ کو جو غذا دی جا تی ہے اس میں خنزیر کے گوشت یا چربی کی ملاوٹ کی جاتی ہے ۔ معلومات کے ذرائع غیر مصدقہ ہیں۔ آپ حضرات کی اس بارے میں کیا رائے ہے ؟ اور احقر اگر خود تحقیق کرنا چاہے کو کہاں تک تحقیق کرسکتا ہے کہ غلو بھی نہ ہو اور تحقیق بھی ہو جاوے ۔ دعا کی درخواست ہے ۔

Published on: Feb 12, 2018

جواب # 158607

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa: 631-535/L=5/1439



اس طرح کی باتیں سننے میں تو آرہی ہیں مگر احقر کو اس کی تحقیق نہیں ،جہاں تک ایسی مرغیوں کے کھانے کا مسئلہ ہے تو اگرچہ مرغیوں کو اس طرح کی غذا دینا جائز نہیں؛لیکن اگر مرغیوں کو ایسی غذا کھلا دی جائے تو چونکہ غذا کھانے کے بعد مستہلک ہو جاتی ہے اس کا اثر باقی نہیں رہتا ؛اس لیے ایسی مرغیوں کا کھانا جائز ہوگا۔



 قال في الدر المختار: ولو أکلت النجاسة وغیرہا بحیث لم ینتن لحمہا حلت کما حل أکل جدي غذي بلبن خنزیر؛ لأن لحمہ لم یتغیر وما غذی بہ یصیر مستہلکا لا یبقی لہ أثر ولو سقی ما یوٴکل لحمہ خمرًا فذبح من ساعتہ حل أکلہ ویکرہ․ الدر المختار: ۹/ ۴۹۱- ۴۹۲کتاب الحظر والإباحبة) ومثلہ في زیلعي (تبیین الحقائق: ۶/ ۱۰کتاب الکراہیة)



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات